فرسٹ مویشی سرمایہ

150،000 تک کا مال مویشی قرضہ

دیہی علاقوں میں بسنے والوں کیلئے مال مویشی ، آمدنی کا زریعہ ہونے کے علاوہ ایک اہم سرمایہ بھی ہوتے ہیں۔ فرسٹ مویشی سرمایہ مختصر سے وسط مدتی قرضہ ہے جو مال مویشی پالنے والوں بالخصوص خواتین کو فراہم کیا جاتا ہے، تاکہ وہ اسے مال مویشی سے متعلق امور مثلاً گلوں کی تعداد بڑھانے اور نئے مویشی خریدنے ، پولٹری اور مچھلی فارمنگ کیلئے مؤثر طور پر استعمال کر سکیں۔

شرائط
  • سالانہ آمدنی (تجارتی اخراجات منہا کر کے) 500،000 سے زائد نہ ہو
  • مستند قومی شناختی کارڈ
  • عمر 18 سے 64 سال
  • مال مویشی کی پرورش میں کم از کم ایک سالہ تجربہ یا دودھ کے کاروبار، مرغ بانی یا مچھلی بانی کا کم از کم تین سالہ تجربہ
  • مال مویشی ، مرغ بانی یا مچھلی بانی کا چلتا ہوا کاروبار موجود ہو
قرضے کی قسم
  • چھوٹی اور درمیانی مدت کی سرمایہ کاری
مقاصد
  • مال مویشی کی نسل کشی اور پرورش
  • پہلے سے موجود جانوروں کی استعداد بڑھانا
  • نئے مال مویشی کا حصول
  • مرغ بانی میں اضافہ
  • مچھلی بانی کی گنجائش میں اضافہ
طریقہ کار
  • گروپ اور انفرادی قرضہ جات
قرض کی رقم
  • کم سے کم: 25,000 پاکستانی روپے
  • زیادہ سے زیادہ : 150,000 پاکستانی روپے
مدت
  • 24 ماہ تک
قرضے کی واپسی
  • برابر ماہانہ اقساط
  • برابر سہہ ماہی اقساط
  • یکمشت ادائيگی
اضافی ضمانت
  • گروپ کی ضمانت
  • شخصی ضمانت
  • تیسری پارٹی کی ضمانت
  • زر ضمانت (قرضہ کی رقم کے برابر) – بعوض نقدی کھاتہ جات، قومی بچت سرٹیفکیٹ
  • جائیداد
دیگر فوائد
  • مال مویشی کی انشورنس اسٹیٹ بینک کی اسکیم کے مطابق
  • قرضہ سے وابسطہ لائف انشورنس

مزيد شرائط و ضوابط بھی لاگو ہوں گے
قابلِ ڈاؤن لوڈ اشتہار